داڑھی رکھنا جعل سازی .... وزیر اعظم کی داڑھی مونڈ کر منہ کالا کرنیوالے کیلئے 25 لاکھ انعام
کولکتہ (خصوصی رپورٹ) بھارتی شہرکولکتہ کی ٹیپوسلطان مسجدکے شاہی امام نے وزیراعظم نریندر مودی کے خلاف فتویٰ جاری کرتے ہوئے ان کی داڑھی اور سرکے بال مونڈ کر منہ کالا کرنے والے کو 25لاکھ روپے انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔ ادھر بھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی) نے فتوے کے اجراءپر مولانا نورالرحمان برکاتی کے خلاف مقدمہ درج کرا دیا۔ مغربی بنگال سے تعلق رکھنے والے ٹیپو سلطان مسجد کے شاہی امام مولانا نورالرحمان برکاتی اور مسجد کی شوریٰ نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے خلاف فتویٰ جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نوٹوں کی تبدیلی کے مسئلے کے بعد عام آدمی کے مسائل میں روز بروز اضافہ ہوتا جا رہا ہے جبکہ بھارت کے زیادہ تر عوام ممتا بینرجی کو وزیراعظم کے طور پر دیکھنا چاہتے ہیں۔ مولانا نورالرحمان برکاتی نے کہا کہ نریندر مودی کا داڑھی رکھنا جعلسازی ہے لہٰذا جو بھی مودی کی داڑھی کاٹ کر اور انہیں گنجا کرکے ان کا منہ کالا کرے گا اس کو 25 لاکھ روپے انعام دیا جائے گا۔ دوسری جانب بی جے پی کے ریاستی سیکرٹری ریتش تیواری نے اس فتوے کے اجراءپر شاہی امام کے خلاف جوراسکھو پولیس سٹیشن میں مقدمہ درج کرادیا۔ منہ کالا‘ انعام

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا